آية الله العظمی حاج شيخ مرزاجوادتبريزی



آیة اللہ العظمی حاج شیخ مرزاجوادتبریزی سن ۱۳۰۵ ہجری شمسی میں تبریزمیں پیداہوئے ۔ ۱۸ سال کی عمرتک انہوں نے دنیوی علم حاصل کیا اورسن ۱۳۲۳ ہجر ی شمسی میں انہوں نے دینی تعلیم کے لئے تبریزکے مدرسہ طالبیہ میں داخلہ لیا ۔ چارسال کے عرصہ میں اپنی ابتدائی تعلیم پوری کر نے کے بعد وہ سن ۱۳۲۷ ہجری شمسی میں اعلی تعلیم کے لئے حوزہ علمیہ قم تشریف لے گئے ۔ و ہاں پر وہ سطح کی تعلیم پوری کرنے کے بعد آیة اللہ العظمی بروجردی کے درس خارج سے علمی استفادہ کرتے ہو ئے تدریس بھی کرنے لگے ۔ سن ۱۳۳۲ ہجری شمسی میں اپنے علم میں اضافہ کی غرض سے وہ نجف اشرف تشریف لے گئے اوروہاں پرانہوں نے آیة اللہ العظمی سیدابوالقاسم خوئی اورآیة العظمی سیدعبدالہادی شیرازی کے درس خارج   سے کسب فیض کیا۔

آیة اللہ تبریزی ، آیة اللہ العظمی سیدابوالقاسم خوئی کے خاص شاگردکے عنوان سے پہچانے جاتے ہیں ۔ موصوف ۲۳ سال تک حوزہ علمیہ نجف میں رہ ے۔ سن ۱۳۵۵ ہجری شمسی میں جب آپ کربلاکی زیارت کرکے نجف کی طرف جارہے تھے تو اس وقت عراقی فوج نے آپ کوگرفتارکرکے ایران واپس بھیج دیا۔

عراق سے آنے کے بعد وہ حوزہ علمیہ قم میں فقہ واصول   کا درس خارج کہنے لگے اورعصرحاضرمیں طالب علموں کی ایک بہت بڑی تعدادان کے درس خارج سے علمی فیض حاصل کررہی ہے۔

آیة اللہ العظمی تبریزی کی تالیفات:

۱ ۔ رسالہ توضیح المسائل

۲ ۔ احکام بانوان درحج

۳ ۔ مناسک حج

۴ ۔ عبقات ولایت

۵ ۔ نفی ال سہوعن النبی

۶ ۔ رسالة المختصر



1 next