عجیب لیکن واقعی



 #  وہ مچھلیاں جو پانی میں ۸۰۰ مٹر کی گہرائی میں زندگی بسر کرتی ہیں ان کے آنکھیں نہیں ہوتی۔

#   چوہا، دنیا کا سب سے زیادہ خراب کاری کرنے والا، پستاندار (البتہ انسان کے بعد) شمار کیا جاتاہے۔چوہے معمولا ہرسال تقریبا دنیا میں پیدا ہونے والی ایک سوم غذائی چیزوں کو خراب کرتے ہیں۔

#   پانی کا گھوڑا، سال کے گرم مہینوں میں اپنی کھال سے گلابی رنگ کا پسینہ نکالتاہے جس سے اس کو ٹھنڈک محسوس ہوتی ہے اس کے علاوہ پسینہ اس کے بدن کو بدبو دار ہونے سے بچاتاہے۔

#   کچھ مختلف پرندہ اپنے بدن کو جووں سے نجات دلانے کے لئے اپنے پروں پر کچھ چیونٹیوں کو بٹھاتے ہیں جن سے ایک مادہ اسیڈفورمیک نکلتاہے اور اس کے ذریعہ جوئیں ہلاک ہوجاتی ہیں۔

#   خیال کیا جاتاہے کہ دنیا کا اتنا بڑا جنگل جس میں ملیونوں درخت پائے جاتے ہیں یہ درخت، حواس باختہ اور فراموش لومڑی کے ذریعہ سے وجود میں آتے ہیں، اس طرح سے کہ لومڑی اپنی غذا کو جو معمولا درختوں کے پھل ہوتے ہیں ان کو خاص طور سے سردیوں میں زمین کے اندر چھپا دیتی ہے اور بعد میں ان ذخیروں کو جو اس نے زمین میں بنائے ہیں بھول جاتی ہے اور اس طرح جنگل کی آبادی میں وسعت پیدا ہوتی جاتی ہے۔

#   شیر ایسے جانور ہے جس کی فیملی بہت چھوٹی ہوتی ہے اس کی فیملی میں ایک شیر نر،ایک شیر مادہ اور ایک بچہ ہوتاہے ،لیکن اس چھوٹی سے معاشرہ میں عدالت کی دور تک کوئی خبر نہیں ہے ، کیونکہ شیر مادہ کی ذمہ داری ہے کہ وہ ۹۰ فیصد شکار کی تلاش کرے اور غذا آمادہ کرے۔ شیر نر بہت ہی کمی کے ساتھ شکار کے لئے جاتاہے۔شیر نر معمولا استراحت کرتاہے۔ شیر نر روزآنہ تقریبا ۲۰ گھنٹے سوتاہے، شکار اور غذا تلاش کرنے کے لئے اپنی جان کوخطرہ میں نہیں ڈالتاہے۔



back 1 next